certifired_img

Books and Documents

Urdu Section

اس سال جس تعداد میں دہشت گرد عناصر کا انکشاف ہوا ہے اس میں گزشتہ برسوں کے مقابلے میں زبردست مثبت تبدیلی سامنے آئی ہے۔ اور مجھے پختہ یقین ہے کہ مختلف شعبوں میں اس کشادہ ذہنی کے دوام سے انتہاپسندی کا دائرہ مزید تنگ ہو گا اور دہشت گرد جماعتوں کو اپنے پیروکاروں کی تعداد میں اضافہ کرنے میں مزید پریشانیاں پیش آئیں گی۔

 

در اصل کشمیر میں تمام کی تمام شدت پسند جہادی بیانبازیاں جو سوشل میڈیا اور یوٹیوب پر مسلمانوں کو مشتعل کرنے کے لئے جاری ہیں ، ان میں کوئی خاص بات نہیں ہے اور ان کی تائید اسلامی احکام ات کے چار مصادر یعنی قرآن ، حدیث ، اجماع اور قیاس میں سے کسی ایک سے بھی نہیں ہوتی ہے۔ جو لوگ ہندوستانی علماء اور فضلاء کی تنقید کرتے ہیں اور ان پر 'حکومت کا ساتھ دینے' اور 'کشمیر میں جہاد کا فتویٰ دینے سے قاصر ہونے' کا الزام لگاتے ہیں انہیں اس بات کی فکر ہونی چاہئے کہ وہ کس طرح آخرت میں اللہ کو اپنا چہرہ دکھائیں گے۔

شریعت اسلامیہ نے جہاد کے جو شرائط  و استطاعات بیان کئے ہیں آج ہمارے زمانہ میں ان کا وجود نہیں۔مثال کے طور پر اس کی فرضیت کی ایک شرط تو عاقل و بالغ  ہونے کی ہے لیکن ان لوگوں کا کیا کہئے جو نفس کی غلامی و پیروی میں اس قدر ڈوب گئے ہیں کہ وہ گویا بے عقل و مجنوں ہو گئے ہیں  اور جہاد و فساد میں امتیاز کرنے کے قابل نہیں ۔ایسے مریضوں کو چاہیے کہ پہلے جہاد بالنفس کریں اور اس کی آزادی ہر ملک دیتا ہے  ۔ جب نفس کی غلامی سے آزاد ہو جائیں  تو دوسرے مسلمانوں کو  بھی نفس کی غلامی سے آزاد ہونے اور اسلام کے فرائض و واجبات کی  شریعت وحقیقت  اور  معرفت سے آگاہ کریں ۔

 

دوسرا گروہ  عوام الخواص کا ہے۔ان لوگوں میں یہاں دونوں پہلو پائے جاتے ہیں۔عوام کا بھی اور خاص کا بھی۔یہ گروہ روحانیت کی طرف متوجہ تو ہوتا ہے لیکن چونکہ رموز باطنی سے بے بہرہ ہوتے ہیں۔کبھی دنیا کے طالب ہوتے ہیں ، کبھی دین کے طالب ، لہذا ان کی باطنی آنکھیں نور باطنی سے پورے طور پر منور نہیں ہوتیں۔اس گروہ کو اہل طریقت کہتے ہیں ۔ تیسرا گر وہ  خالص الخاص کا ہے ۔ انہیں اہل معرفت بولتے ہیں۔ اے عمر (رضی اللہ عنہ)! ہدایت رہنمائی طالب استعداد اور جنس کے موافق ہوا کرتی ہے ۔یہ اسرار الہی کی نعمت عظمی نا اہل عوام الناس کو نہیں دی جاتی ، کیونکہ ان کو ایسی نعمت دے دینا اس نعمت کی ناقدر شناسی ہے ۔نیز چونکہ وہ اس نعمت کے متحمل نہیں ہو سکتے ،لہذا ان کے گمراہ ہونے کا اندیشہ ہے۔

 

آج کے دور میں ’’حقوق الأ قلیات الدینیۃ فی الدیار الاسلامیۃ‘‘ کے عنوان سے اس اسلامی و عالمی مؤتمر کا انعقاد بڑی اہمیت کا حامل ہے، یہ مؤتمر امیر المؤمنین الملک محمد السادس ۔ حفظہ اللہ۔ کی عنایت و توجہ سے منعقد کی جارہی ہے، کیونکہ اہل مغرب اور اسلام دشمنوں نے اسلام کی تصویر کوایسا مسخ کردینے کاتہیہ کر رکھا ہے، گویا اسلام تشدد کا علم بردار ہے اور عوام بالخصوص اسلامی قلم رو میں زندگی گذارنے والے غیر مسلموں کے درمیان امتیاز اورتفریق جیسا سلوک پیش کرتا ہے-

 

یہ آیتیں انسانی زندگی کا نصب العین عبادت قرار دیتی ہیں۔ خدا ہم سے رزق طلب نہیں کرتا، آیت البتہ یہ کہتی ہے کہ خود ہمارا رزق اللہ کے ذمے ہے۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ ہماری زندگی کا مقصد خدا کی عبادت ہے جس کا محرک نہ تو باطنی خواہشات ہیں اور نہ ہی خارجی اثرات۔ بلکہ یہ تو صرف غور و فکر سے ہی معرض وجود میں آتا ہے۔ جب کوئی شخص اپنی نفس بینی اور اپنے ماحول سے اوپر اٹھے تبھی اسے اس بات کا اندازہ ہوسکتا ہے کہ اس کی زندگی کا ایک اعلی ترین مقصد بھی ہے جس پر اسے اپنی تمام تر توانائی صرف کرنی چاہئے۔

 

کثرت ازواج کے آئینی جواز پر چیلنج کا فیصلہ کرنے میں عدلیہ کا معیار یہ ہونا چاہئے کہ آیا یہ اسلام کا کوئی بنیادی مذہبی عمل ہے یا نہیں۔ اس امر کو بھی نظر انداز نہیں کیا جا سکتا کہ اس ملک میں تقریباً صرف 150 ملین مسلمان ہی اس فرسودہ معمول کو زندہ رکھے ہوئے ہیں۔ کثرت ازواج پر اس عمومی قانونی پابندی کو شکست دینے کے لئے مسلمانوں سے کہیں زیادہ دوسرے لوگ اسلامی قانون کا غلط استعمال کرتے ہیں۔ اس کے برعکس عدلیہ کے فیصلوں کے باوجود ، نئی بیویوں کی تلاش میں فرضی طور پر اسلام قبول کرنے کی روایت اب تک ختم نہیں ہوئی ہے۔

 

نفس کے بندے  کو سب سے پہلے نفس کی بندگی سے آزادی حاصل کرنی چاہیے تاکہ وہ زکوۃ حقیقی ادا کرنے کے قابل ہو جائے۔ نیز زکوۃ عاقل و بالغ پر فرض ہے ،دیوانہ و نابالغ پر فرض نہیں ہے ۔پس جس شخص پر غفلت و نفسانیت کا دیو سوار ہو اور وہ ہمہ تن نفس و شیطان کے پنچہ میں گرفتار ہو ۔ عارفان الہی کے نزدیک وہ عاقل و بالغ نہیں ہو سکتا ، بلکہ وہ ایک نابالغ شیر خوار بچے کی مانند ہے اور اہل معرفت کے نزدیک وہ کالعدم سمجھا جاتا ہے ۔اس پر زکوۃ حقیقی کیونکر فرض ہو سکتی ہے ۔پس سب سے پہلے یہ لازم ہے کہ بندہ نفس کی بے شعوری سے نجات حاصل کرے تاکہ وہ معرفت الہی کی آزادی اورعقل سے سرفراز ہو کر حقیقی  زکوۃ ادا کرنے کے قابل بن جائے۔

 

افسوس کی بات ہے کہ آج پوری دنیا میں بے شمار انتہاپسند جماعتیں اسلام کے نام پر سنگین جرائم کا ارتکاب کر رہی ہیں۔ ان کا یہ عمل اسلام کی خوبصورت اور پرامن تعلیمات سے براہ راست متصادم ہے۔ مسلمانوں کے لئے تعلیم کا سب سے بڑا سرچشمہ حضور نبی اکرم (صلی اللہ علیہ وسلم) کے اعمال یعنی آپ ﷺ کی سنتیں ہیں جو مسلمانوں کو مذہبی رواداری کی تعلیم دیتی ہیں۔ پیغمبر اکرم (صلی اللہ علیہ وسلم) کا رویہ انسانوں کے تئیں محبت ، عفو درگزر اور رأفت و رحمت پر مبنی تھا۔ آپ ﷺ کو اور آپ ﷺ کے پیروکاروں کو اہل مکہ نے جو اذیتیں اور تکلیفیں دیں وہ ذلت آمیز تشدد سے کم نہیں تھیں ، لیکن ان سب کے باوجود آپ ﷺ نے کبھی ان کی برائی نہیں چاہی۔ البتہ ، آپ ﷺ نے ان کے دلوں کی تبدیلی چاہی۔

 

جو علما و فقہا اور سالکین غیر مجذوب ہیں اور وہ کسی مرشد کامل کے فیض صحبت سے مستفیض نہیں ہوئے ۔وہ جذبہ اسرار الہی سے بالکل بے خبر ہیں ۔یہ لوگ دنیوی و زینت اور شہوت نفسانی کے پیچھے مارے مارے پھرتے ہیں ۔گویا وہ جبہ و دستار اور صوفیائے کبار کے جامہ میں ملبوس ہوتے ہیں ، لیکن در حقیقت ان کی اندرونی حالت یہ ہوتی ہے کہ حرص دنیوی اور خواہشات نفسانی میں گرفتا رہوتے ہیں ، ان کا مقصود اس جامہ فقیری سے خدا پرستی نہیں ہوتا ، بلکہ وہ سراسر طالب جاہ و مال ہوتے ہیں ۔ان کا کلمہ اور نماز و روزہ کیا حقیقت رکھتا ہے ۔

 

اس کے لئے ہمیں ایک مضبوط اور متنوع نسل پرستی مخالف تحریک کی بھی ضرورت ہے جو منافرت اور تقسیم و تفرقہ کی سیاست سے نمٹنے کے لئے پر عزم ہو۔ "لو اے مسلم ڈے (Love a Muslim Day)"، ایک اہم اقدام ہے لیکن جیسا کہ مجھے علم ہے اکثر مسلمان اس بارے میں فکر مند نہیں ہیں کہ ان سے محبت کی جائے ، بلکہ ان کا کہنا ہے کہ ہم صرف اپنے ملک میں محفوظ محسوس کرنا چاہتے ہیں۔ ہم پورے وقار کے ساتھ جینا چاہتے ہیں اور ہم یہ بھی چاہتے ہیں کہ ایک مکمل انسان اور ایک مکمل شہری کی حیثیت سے ہماری قدردانی کی جائے اور ہمیں یہ ثابت کرنے کی ضرورت پیش نہ آئے کہ ہم کتنے اچھے یا کتنے برے برطانوی شہری ہیں ۔

 

انہیں چاہئے کہ کسی مرشد کامل کی صحبت میں رہ کر اپنے دل کو غرور نفسانیت کے خس و خاشاک سے پاک و صاف کریں اور معرفت الہی سے معمور اور آباد بنائیں، تاکہ وہ صحیح معنوں میں انسان بن جائیں اور گمراہی سے نکل کر راہ راست پر آ جائیں ، جب ہی ان کی نماز حقیقی نماز ہوگی اور یہی نماز بارگاہ الہی میں قبولیت کے قابل ہوگی اور خوش قسمتی سے ایسا حقیقی نمازی ہزاروں لاکھوں میں سے ایک آدھ بھی مل جائے  تو اس کی خدمت و صحبت اکسیر احمر سے بدرجہا بہتر ہے ۔

 

اِدھر کئی برسوں کے دوران حریت جیسی تنظیموں سے میدان صاف ہو چکا ہے اور ہمیں وادی کے اندر انتہا پسند اسلام کی ایک نئی زبان سننے کو مل رہی ہے۔ غزوۃ انصار الہند اسلامی خلافت قائم کرنے کی بات کر رہا ہے جو کہ وادی کے اندر سیاسی اعتبار سے ایک نیا شوشہ ہے۔ مذہب ہمیشہ سے عسکریت پسندی کا ایک حصہ رہا ہے، لیکن اسلام نے ہمیشہ اپنا کام قومی ریاست کے مروجہ ڈھانچے کے اندر ہی کیا ہے۔

 

سرکار خواجہ غریب اور حضور خواجہ قطب الدین بختیار کاکی  رضی اللہ عنہما  تو متفقہ طور پر اللہ کے ولی اور دوست تھے ۔خواجہ غریب نواز کی شان محبوبی کا یہ عالم تھا کہ جب آپ نے  وصال فرمایا تو آپ کی پیشانی پر قلم قدرت سے لکھا ہوا تھا : حبیب اللہ مات فی حب اللہ ۔یعنی یہ اللہ کا حبیب ہے جو اللہ کی محبت میں جاں بحق ہوا ہے ۔ یہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی اطاعت و فرماں برداری کا انعام ہی ہے کہ حضرت خواجہ غریب نواز علیہ الرحمہ کو اتنا بڑا مقام و مرتبہ ملا ۔اگر وہ اپنے نبی پاک صلی اللہ علیہ وسلم کی اتباع اور ان سنت کو ترک کر دیتے تو اس مقام پر فائز نہ ہوتے ، کیونکہ حضوراکرم صلی اللہ علیہ وسلم کا فرمان ہے : لو ترکتم سنۃ نبیکم لضللتم (مشکوۃ) یعنی اگر تم اپنے نبی کی سنت چھوڑ  دو گے تو گمراہ ہو جاو گے ۔حضر شیخ سعدی علیہ الرحمہ نے اس سلسلے میں خوب فرمایا ہے:خلاف پیمبر کسے راہ گزید  /   کہ ہر گز بمنزل نہ خواہد رسید ۔ترجمہ : خلاف پیمبر جو چلے گا وہ ہرگز منزل مقصود کو نہیں پہنچ سکتا ۔

فرانس میں صورت حال اس وقت بدتر ہوئی جب داعش نے ان بے روزگار نوجوانوں کو اپنی جماعت میں شامل کیا ، جو مسلمان ہونے کا دعوی کرتے ہیں اور ایسے جمہوری ممالک میں رہتے ہیں جہاں انسانی حقوق کا احترام کیا جاتا ہے اور انہیں ان ممالک میں وہ آزادی اور مراعات فراہم کی جاتی ہیں جو انہیں خود اپنے ملکوں میں میسر نہیں ہیں۔ ان دہشت گردوں کو مذہبی یا اسلام یا انسانی حقوق کا کچھ بھی علم نہیں ہے اور وہ اسلام کے سب سے بڑے دشمن ہیں۔

 
The Fate of Extremists انتہاپسندوں کا انجام
Mansour Alnogaidan
The Fate of Extremists انتہاپسندوں کا انجام
Mansour Alnogaidan, Tr. New Age Islam

العودۃ کی گرفتاری جس دن ہوئی اس دن لوگوں کی ایک بھیڑ نے ابن عثیمین کو گھیر لیا اور العودۃ کی حمایت میں کھڑے ہونے کے لئے ان پر دباؤ ڈالا۔ انہوں نے جواب دیا، "تم لوگوں نے اپنی حدیں پار کر دی ہیں۔ تم نے مرکزی حکومتی عمارت کو گھیر لیا اور اس کے دروازے کو توڑ دیا۔ تم نے ریاست کے ناموس کو زد پہنچایا ہے۔ بھیڑ میں سے ایک شخص نے کہا،‘‘تم ایک ذلیل مبلغ ہو’’۔ ایک اور شخص نے کہا، ‘‘تم ایک بزدل انسان ہو’’۔ اس بھیڑ کا ایک رکن اے.زیڈ. بھی تھا –اور یہ وہی نوجوان تھا جو دو سال بعد قتل کی کوشش میں گرفتار کیا جانے والا تھا۔

 
System of the Pious Land, Pakistan  پاک سر زمین کا نظام
Imam Syed Ibn Ali, New Age Islam
System of the Pious Land, Pakistan پاک سر زمین کا نظام
Imam Syed Ibn Ali, New Age Islam

اب کچھ دن پہلے خبر آئی تھی کہ سعودی عرب اسرائیل کے ساتھ تعلقات بڑھا رہا ہے۔ اسلحہ کی ڈیل ہو رہی ہے۔ کس کے خلاف؟ ’’ایران کے خلاف‘‘۔ ادھر یمن میں بمباری ہو رہی ہے۔ شام کا حال کس سے چھپا ہوا ہے؟ عراق میں کیا کچھ نہیں ہو رہا۔ ہر طرف خون ہی خون ہے۔ کیا ابھی امت کے بیمار ہونے میں شک رہ گیا ہے۔ کیونکہ یہ اس امام مہدی کی تلاش نہیں کرتے جس کا اس مولوی صاحب نے اپنی مسجد میں ذکر کیا تھا۔

 

آج ہم جس بھی مسلم ملک کی طرف نظر ڈالتے ہیں ہمارے سامنے بدعنوانی ، نا انصافی ، ظلم اور غربت جیسے بے شمار داخلی مسائل کے انبار نظر آتے ہیں۔ اگر ہم اس کے بارے میں ذرا  بھی سوچیں تو  ہمیں یہ محسوس ہو گا کہ ان میں سے اکثر مسائل خود انسانوں کے ہی پیدا کردہ ہیں۔ بہ الفاظ دیگر یہ کہا جا سکتا ہے کہ بڑے پیمانے پر اس کا تعلق براہ راست یا بالواسطہ طور پر اس نظامِ تعلیم سے ہے جس نے ایسے لوگوں کو پیدا کیا ہے جو اب تک ان مسائل کو زندہ رکھے  ہوئے ہیں۔

 

کوئی ہو جن ہو یا انس، مومن ہو یا کافر، حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہ نے فرمایا کہ حضور کا رحمت ہونا عام ہے، ایمان والے کے لئے بھی اور اس کے لئے بھی جو ایمان نہ لایا ہو۔ مومن کے لئے تو آپ دنیا اور آخرت دونوں میں رحمت ہیں اور جو ایمان  نہ لایا اس کے لئے آپ دنیا میں رحمت ہیں کہ آپ کی بدولت تاخیر عذاب ہوئی اور خسف (زمین میں دھنسانے کا عذاب) و مسخ ( شکل بدل دینے کا عذاب) اور استیصال (کسی قوم کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنا) کے عذاب اٹھا دیئے گئے--

 
The Secret of Happiness  خوشی کا راز
Ahmed Al-Arfaj
The Secret of Happiness خوشی کا راز
Ahmed Al-Arfaj, Tr. New Age Islam

وہ فلو کی مانند ایک فرد سے دوسرے میں پھیل سکتے ہیں۔ مثال کے طور پر جنازہ کے موقع ہر شخص غمناک ہوسکتا ہے کیونکہ لوگوں کو اپنے ارد گرد کے ماحول میں اداسی اور دکھ کی کیفیت محسوس ہو سکتی ہے۔ مطلب یہ ہے کہ اگر آپ کہیں بھی ایسی جگہ جائیں جہاں درد اور تکلیف ہو تو آپ ضرور اداسی محسوس کریں گے۔یہی خوشی اور جوش و ولولہ جیسے مثبت جذبات کا بھی حال ہے، جو لوگوں کے درمیان آسانی سے پھیل سکتے ہیں جیسا کہ شادیوں اور پارٹیوں میں دیکھا جا سکتا ہے۔ لوگ چہرے کی کیفیت سے فوراً متاثر ہوسکتے ہیں۔

 

مولانا امداد اللہ رشیدی سے ہمارے وہ علما ء بھی سبق لیں جو مسلکی بنیاد پر مسلمانوں کے درمیان اختلافات کو ہوا دیتے رہتے ہیں ۔ مولانا امداد اللہ رشیدی کا معاملہ غیر قوم کے ساتھ تھا پھر بھی انہوں نے انہیں نقصان پہنچانے سے مسلمانوں کو سختی سے باز رکھا۔ یہ ان ملاؤں کے لئے عبرت کا مقام ہے جو مسلمانوں کو آپس ہی میں لڑا کر قوم کو نقصان پہنچانے کے درپے رہتے ہیں ۔

 

طلاق ہو جانے پر خواتین کا سب سے پہلے کسی دوسرے مرد سے شادی کرنا ، اس کے بعد اس سے طلاق لینا اور اس کے بعد پھر سابق شوہر سے شادی کرنا صرف واہیات ہی نہیں بلکہ ایک انتہائی غیر انسانی عمل بھی ہے۔ سب سے پہلے خود مسلمانوں کو ہی اس عمل کے خاتمے کا مطالبہ کرنا چاہئے۔ اب یہ مسلمانوں پر ہے کہ وہ ان قدامت پسند معمولات کو جاری رکھتے ہیں اور امت مسلمہ کی بدنامی اور ذلت و رسوائی کا باعث بنتے ہیں یا وہ یک زبان ہو کر عدالت سے ان خواتین مخالف معمولات کو ختم کرنے کی درخواست کرتے ہیں۔ اب فیصلہ بالکلیہ ان ہی کے ہاتھوں میں ہے۔

 

اگر حسد، غصہ، کینہ، بغض اور اس طرح کی دیگر امراض موجود ہوں تو لاکھ سجدے بھی کرلئے جائیں مگر ان امراض کا علاج نصیب نہیں ہو گا۔ اس لئے کہ ان امراض کا علاج ظاہری عبادت میں ہے ہی نہیں۔ لہذا جب تک خلقِ خدا کی خدمت پر کمربستہ نہ ہوا جائے اور جسمانی تکالیف و مشکلات برداشت نہ کی جائیں، اس وقت تک نہ ان امراض سے چھٹکارہ ملے گا اور نہ توبہ کا سفر طے ہوگا۔

 
The Essence of Prayer  عبادت کی روح
Maulana Wahiduddin Khan
The Essence of Prayer عبادت کی روح
Maulana Wahiduddin Khan, Tr. New Age Islam

لہٰذا ، حقیقت یہ ہے کہ قول و فعل کا ایسا تضاد صرف جعلی عبادت سے ہی پیدا ہوتا ہے –ایسی عبادتیں صرف ایک ذمہ داری سمجھ کر ادا کر لی جاتی ہیں ، ان میں معرفت خدا وندی کا کوئی شعور نہیں ہوتا ہے۔ حقیقی عبادت کی بنیاد صرف خدا کے دائمی ذکر پر ہی ہوتی ہے ، اور جو خدا کو یاد رکھتا ہے اسے کبھی نہیں بھولتا۔

 

ہندوستان کو ایک مخصوص نظر یہ کے لوگ جلانے اور جمہوری اقدار کو دفن کرنے کی سازش کررہے ہیں ۔ بہار جل رہا ہے ،مختلف صوبوں میں نفرت اپنی تمام انتہا سے آگے نکل چکی ہے۔ بہار پر نفرتوں کا سایہ کچھ زیادہ ہی گہرا ہوچکا ہے۔ کیا اقتدار انہیں راستوں کے ذریعہ حاصل کیا جاتا ہے؟ معیشت تباہ ہوچکی ہے ، ہندوستان سے روزگار ختم ہوچکے ، بینک دیوالیہ ، مودی حکومت نے کروڑوں کروڑ کی دولت لے کر مالیہ اور نیرو مودی جیسے لوگوں کو فرار ہونے کا آسان راستہ مہیا کرایا۔

 


Get New Age Islam in Your Inbox
E-mail:
Most Popular Articles
Videos

The Reality of Pakistani Propaganda of Ghazwa e Hind and Composite Culture of IndiaPLAY 

Global Terrorism and Islam; M J Akbar provides The Indian PerspectivePLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on impact of Sufi IslamPLAY 

Petrodollar Islam, Salafi Islam, Wahhabi Islam in Pakistani SocietyPLAY 

Dr. Muhammad Hanif Khan Shastri Speaks on Unity of God in Islam and HinduismPLAY 

Indian Muslims Oppose Wahhabi Extremism: A NewAgeIslam TV Report- 8PLAY 

NewAgeIslam, Editor Sultan Shahin speaks on the Taliban and radical IslamPLAY 

Reality of Islamic Terrorism or Extremism by Dr. Tahirul QadriPLAY 

Sultan Shahin, Editor, NewAgeIslam speaks at UNHRC: Islam and Religious MinoritiesPLAY 

NEW COMMENTS

  • Naseer sb., The important thing is not whether you are quoting from the Bible.....
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • "The only solution is to liberalise Turkey, to make....
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • What the Pakistanis did to Abdus Salam should put all Muslims to shame.
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • True, we should respect all prophets equally. We should also listen....
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • Jesus – Was He God? Many times Jesus referred to His own deity, both....
    ( By jeff allen )
  • Now will be in their list.
    ( By KLD )
  • Not to despise wisdom, since Quran 2:269 mentions God is the one to grant wisdom and wealth to whom he wills....
    ( By zuma )
  • Muslims should treat those Muslim women who wear or do not wear hijabs with equal status. Muslim men....
    ( By zuma )
  • There is nothing new in GM sb’s comment. He is simply repeating himself as he always does. GM sb says ....
    ( By Naseer Ahmed )
  • Let's give a bad scenario that Quran 9:5 was written after the Meccans had converted to Muslims, Quran....
    ( By zuma )
  • AAP KHUD KO MANWAKAR SHARMINDA NAHI HO RAHE THE ....
    ( By Anjum )
  • Recently, the Secretary of the Publications (Tasneefi Academy) at Jamaat-e-Islami Hind Maulana Muhiuddin Ghazi...
    ( By GRD )
  • WHAT IS ZAIDI SHIA? WHAT IS ITHNA ASHARI SHIA?...
    ( By Tah )
  • There is no such thing as mentioned in Satish's comment.
    ( By GGS )
  • Mr. Satish you say, "9:5 was revealed one year after the Meccans had converted to Islam"....
    ( By GGS )
  • 9:5 was revealed one year after the Meccans had converted to Islam, so the question of fighting ...
    ( By Satish )
  • According to Quran 4:19, men cannot inherit women against their will. The following is the extract: An-Nisa (The Women....
    ( By zuma )
  • Quran 4:124 mentions clearly only those who believe in Allah and do good deeds to paradise instead...
    ( By zuma )
  • How about Quran 2:246. Al-Baqara (The Cow) - 2:246 [read in context] أَلَمْ تَرَ إِلَى الْمَلإِ مِن بَنِي إِسْرَائِيلَ مِن بَعْدِ مُوسَى إِذْ قَالُواْ لِنَبِيٍّ ...
    ( By zuma )
  • Malaysia is already lost, one of my Buddist left Malaysia long long ago due to bad treatment to other faiths follower'
    ( By Aayina )
  • To Sultan Shahin & Zuma 100 chuhe Kha ke Billi haj Ko Chali. Forcefully...
    ( By Aayina )
  • Zuma do play interpretation interpretation game, Suktan Shahin does same, misleads to all other who are not believing in your book.' ...
    ( By Aayina )
  • Mr Zuma you are using the word fight though the Arabic word I'd jahd or jahadu or yujahiduna or ....
    ( By Arshad )
  • What would be the consequence if the word, fight, in Quran 2:193 to be....
    ( By zuma )
  • If the word, fight, in Quran 2:190 has to be confined to the word, struggling, what....
    ( By zuma )
  • Hats Off is now babbling utter nonsense! He never advances any rational....
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • A reasonable rebuttal of Jehadi attempts to hijack the Quran.
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • The article looks sarcastic and contemptuous.There...
    ( By Syed Mohamed )
  • @Syed Mohamed If you indeed consider concerns at the unduer harassment....
    ( By Abhijit Mukherjee )
  • @Syed Nizamuddin Kazmi A foolish article for cheap popularity
    ( By Syed Mohamed )
  • A sane Islamic voice at last.'
    ( By Radharao Gracias )
  • YE DAR ACHCHHA HAI.'
    ( By Gautam Ghosh )
  • Islam is religion of Terrorism see the history...
    ( By Prashant Surani )
  • @Paul Jeyaprakash what would you say about RSS hooliganism and Modi's views over Kashmir issue?....
    ( By Hafeez Niazi )
  • O fine let us discuss debate truth will come one day'..
    ( By Rafiqul Islam )
  • Holy BIBLE, Colossians 2: V 8. Beware lest anyone cheat you through....
    ( By Agnelo Diaz )
  • @Shaik Abdul Hameed yeah except you everyone is a fool that how...
    ( By Dominic Richard )
  • @Rajiv Engti I am very sorry. The whole system lives in Myth...
    ( By Shaik Abdul Hameed )
  • @ Shaik Abdul Hameed change your mentality...
    ( By Rajiv Engti )
  • Please think about world's terrorists activity, you will observe more or less....
    ( By Siddhartha Banerjee )